انٹرنیشنل

پلوامہ ڈرامے میں ہلاک بھارتی فوجی کی اہلیہ ہوس کے مارے افراد کے چنگل میں پھنس گئی، بیچاری کے ساتھ کیا ہو گیا؟

سرینگر (ویب ڈیسک) 14 فروری کو پلوامہ حملے میں مارے گئے ایک بھارتی فوجی نصیراحمد کی بیوہ شازیہ کوثر کا کہنا ہے کہ وہ اس سانحہ کے بعد در در کی ٹھوکریں کھانے پر مجبور ہیں ، سراج الدین جو شازیہ کے دیور ہیں نے عدالت میں نصیر کے بچے کی سرپرستی کا

ایک مقدمہ دائر کیا تھا جس پر عدالت نے انہیں بچے کی حفاظت کرنے کا حکم دیا تھا۔ تاہم نصیر کی اہلیہ کا کہنا ہے کہ سراج عدالت کے حکم نامے کا غلط استعمال کر رہا ہے۔ بین الااقوامی میڈیا کے مطابق شازیہ کا کہنا ہے کہ سراج انہیں بچوں سے ملنے نہیں دیتا اور اپنے اثر و رسوخ کا استعمال کر کے سبھی بینک اکاؤنٹس بند کر دییے ہیں جس کی وجہ سے ان کی زندگی اجیرن بن گئی ہے۔ نصیر کی ہلاکت کے بعد مختلف تنظیموں بشمول حکومت اور غیر سرکاری تنظیموں نے نصیر احمد کے بچوں اور اہلیہ کی مدد کرنے کا اعلان کیا تھا۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
Close
Close